برطانیہ: دہشتگردی کی روک تھام کے بل نے طلباء کے انقلابی خیالات بھی جرم بنا دئیے!

theresa may برطانیہ کی سیکریٹری داخلہ، تھریسا مے نے کہا ہے کہ نئے دہشتگردی مخالف بل کی دفعات کے تحت، جامعات کو ’’لوگوں کو دہشتگردی کی جانب جانے سے روکنے کی ضرورت کا ۔۔۔ احترام کرنا چاہئے۔‘‘ورنہ انہیں عدالتی احکامات کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے جو انہیں ایسا کرنے پر مجبور کر سکتے ہیں۔
متعدد اساتذہ اورطلباء پریشان ہیں کہ یہ بل جامعات سے کچھ زیادہ ہی توقعات وابستہ کئے ہوئے ہے اور یہ کہ ان کے رہنما اصولوں میں سے کچھ سے متصادم بھی ہے۔آزادیِ اظہار اور نظریات کے تجزئیے کی آزادی کی حوصلہ افزائی کرنا جامعات کا بنیادی اصول ہوتا ہے، خواہ ایسا کرنا کتنا ہی ناخوشگوار کیوں نہ ہو۔۔۔ مگر یہ بل جامعات کے اس اصول کی راہ میں رکاوٹ بن رہا ہے جو مستقبل قریب میں طلباء اور اساتذہ کیلئے کسی قدر پریشانی کا باعث بن سکتاہے۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *