لوڈشیڈنگ کے خلاف پیپلز پارٹی کے مظاہرے کے دوران ن لیگی کارکنوں سے ٹکراؤ!

لاڑکانہ -بجلی کی لوڈشیڈنگ کیخلاف سندھ کے مختلف علاقوں میں پیپلز پارٹی کے کارکن سڑکوں پر نکل آئے ۔ جیالوں نے وفاقی حکومت کیخلاف نعرے بازی بھی کی ۔ کندھ کوٹ میں بجلی کی لوڈ شیڈنگ کیخلاف پیپلز پارٹی نے گھنٹہ گھر چوک پر احتجاج کیا ، نوشہرو فیروز میں بھی بجلی کی لوڈشیڈنگ کے خلاف پیپلز پارٹی کے کارکنوں نے پریس کلب کے باہر دھرنا دیا ، ٹنڈو محمد خان میں بجلی کی لوڈشیڈنگ کیخلاف پیپلز پارٹی کے کارکنوں نے شدید احتجاج کیا ، حیدر آباد بدین روڈ بلاک کر دی گئی جس سے مسافروں کو شدید پریشانی کا سامنا کرنا پڑا ، لاڑکانہ میں پیپلز پارٹی کی جانب سے باغ جناح چوک پر دوران دھرنا لیگی کارکنان کی ریلی بھی آگئی ۔ وزیر اعظم کے حق میں نعروں کے دوران دونوں جماعتوں کے کارکنان آمنے سامنے ہوگئے ۔ اس دوران پولیس کی بھاری نفری بھی موقع پر پہنچ گئی جس نے کارکنوں کو لڑائی سے روک دیا ۔ ٹھٹھہ میں بھی بجلی کی لوڈ شیڈنگ کیخلاف پیپلزپارٹی کے کارکنوں کا احتجاج عروج پر رہا ، گھوٹکی میں پیپلز پارٹی نے بجلی کی لوڈشیڈنگ کے خلاف بھٹائی چوک پر احتجاج کیا ۔ خیرپور میں پیپلز پارٹی کارکنوں نے گو نواز گو ریلی کے دوران مال روڈ پر دھرنا دیا ۔ دھرنے میں بڑی تعداد میں خواتین بھی شریک ہوئیں ۔ کارکنوں نے ریلی میں گو نواز گو اور بجلی کی لوڈ شیڈنگ بند کرو کے پلے کارڈ اٹھائے ہوئے تھے :-

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *