سرکاری اسکولوں میں جعلی داخلوں کا ہولناک انکشاف منظرعام پر!

 لاہور -محکمہ سکولز کی جانب سے انرولمنٹ کے بڑے بڑے ٹارگٹس ملنے کے بعد سکول سربراہوں نے بچوں کے جعلی داخلے کرنا شروع کر دیے۔ محکمہ نے دوبارہ سے ای ٹیگنگ کرنے کے احکامات جاری کر دیے۔ محکمہ سکولز ایجوکیشن کی جانب سے جاری مراسلے نے صوبے کے سکول سربراہوں کی جعلی انرولمنٹ کا پول کھول دیا ہے۔

مراسلے میں سکول سربراہوں کو کہا گیا ہے کہ ای ٹیگنگ اور صوبائی لیول پر محکمہ کو موصول ہونے والے ڈیٹا میں بہت فرق ہے، لہذا فوری طور پہلی کلاس میں داخل ہونیوالے بچوں کی ای ٹیگنگ کے بعد معلومات محکمہ کو روزانہ کی بنیادوں پر فراہم کی جائیں۔ ذرائع سے معلوم ہو اہے کہ سکول سربراہوں نے اپنی کارکردگی بڑھا چڑھا کر دکھانے کیلئے جعلی داخلے کئے ہیں۔

دوسری طرف سکول سربراہوں کا کہنا ہے کہ محکمہ کی جانب سے بچوں کے داخلے کیلئے غیر حقیقی ٹارگٹس دیے جاتے ہیں جن کو پورا کرنا ممکن نہیں ہوتا۔ اسی وجہ سے کچھ اساتذہ جعلی داخلے کر کے ٹارگٹس پورا کرنے کی کوشش کرتے ہیں۔ محکمہ کو چاہیے کہ وہ زمینی حقائق کو مدنظر رکھتے ہوئے داخلوں کا ٹارگٹ دے اور سکولوں میں پرائیویٹ سکولوں کی طرح سہولیات دی جائیں تا کہ شہری زیادہ سے زیادہ بچوں کو سرکاری سکولوں میں داخل کروائیں :-

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *