بچوں کو لیپ ٹاپ نہ دوں تو کیا ان کے ہاتھ میں کلاشنکوف تھمادوں؟ : شہباز شریف

Related image

سیالکوٹ -وزیر اعلیٰ پنجاب شہباز شریف نے کہا ہے کہ قوم کے بچوں کو لیپ ٹاپ دینے پر مجھے تنقید کا نشانہ بنایا گیا، میں بچوں کو لیپ ٹاپ نہ دوں تو کیا ان کے ہاتھوں میں کلاشنکوف تھما دوں؟

سیالکوٹ میں طلبہ کی تقریب سے خطاب میں شہباز شریف نے پنجاب کے طلبہ میں 7ارب روپے مالیت کے1 لاکھ 15ہزار لیپ ٹاپ تقسیم کرنے کااعلان کرتے ہوئے کہا کہ اگلے سال ڈیڑھ لاکھ لیپ ٹاپ کا مزید فنڈ رکھا جائے گا۔ لیپ ٹاپ تقسیم کرنے پر تنقید کے نشتر برسائے گئے، کہا گیا کہ شہباز شریف لیپ ٹاپ تقسیم کر کے طلباءکو ہمنوا بنارہا ہے۔ حالانکہ نوجوانوں کو لیپ ٹاپ دے کر ملک میں میرٹ کی بحالی اور طلبہ و طالبات میں محنت کاجذبہ پیدا کرنا تھا۔ جدید ٹیکنالوجی نے نوجوانوں کوبااختیاربنایا۔ تعلیم کے ساتھ طلبہ دیگرسرگرمیوں میں بھی دلچسپی ظاہر کریں۔

وزیر اعلیٰ پنجاب نے مزید کہا کہ چائنا اکنامک کوریڈور معاشی ترقی کا منصوبہ ہے، تمام منصوبوں پر نواز شریف کی لیڈرشپ میں کام ہورہا ہے۔ چین نے سی پیک کے بدلے کچھ نہیں مانگا، کوئی شرائط نہیں رکھی، ڈو مور ڈو مور کا مطالبہ نہیں کیا :-

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *