بھارتی خاتون عظمیٰ کے بھائی کا بیان بھی منظرعام پر آ گیا !

13

نئی دلی ۔ پاکستانی لڑکے طاہر سے شادی کرنے والی بھارتی خاتون ڈاکٹر عظمیٰ کے بھائی نے بھی اپنی بہن کی جانب سے لگائے گئے الزامات دہرا دیے اور کہا ہے کہ اس کی بہن سے طاہر نے گن پوائنٹ پر شادی کی ، عظمیٰ پاکستان شادی کرنے نہیں بلکہ طاہر اور اس کے اہلخانہ سے ملنے گئی تھی۔
نجی ٹی وی  کے مطابق بھارت سے پاکستان آنے والی بھارتی خاتون عظمیٰ کی پاکستانی لڑکے طاہر سے شادی گزشتہ چند دنوں سے موضوع بحث بنی ہوئی ہے۔ زبردستی شادی کے الزامات لگانے والی عظمیٰ کے متضاد بیانات نے معاملے کو پوری طرح الجھا کر رکھ دیا ہے، تاہم اب اس کا بھائی بھی منظر عام پر آگیا ہے۔

عظمیٰ کے بھائی وسیم احمد نے اپنی بہن کی بھارت واپسی کے سلسلے میں وزیر خارجہ سشما سوراج سے ملاقات کی ، جس کے بعد وسیم نے اپنے ایک ویڈیو بیان میں کہا کہ اس کی آخری بار 7 مئی کو ٹیلی فون پر اپنی بہن عظمیٰ سے بات ہوئی ۔ وسیم احمد نے الزام عائد کیا کہ اس کی بہن عظمیٰ پاکستان میں طاہر اور اس کے اہلخانہ کو دیکھنے گئی تھی لیکن اس کی بہن نے فون پر اسے بتایا ہے کہ اس کو مارا پیٹا گیا اور گن پوائنٹ پر زبردستی نکاح کیا گیا:۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *