وہ ائیرپورٹس جہاں جانا خطرے سے خالی نہیں ، تازہ ترین معلومات !

4

لاہور۔ سفر کو آسان اور محفوظ ترین بنانے کے لئے دنیا بھر میں جدید ٹیکنالوجی کا سہارا لیا جا رہا ہے لیکن دنیا میں اب بھی چند ایسے ایئرپورٹس موجود ہیں جو خطرے سے خالی نہیں۔ سکیاتھوس ایئرپورٹ کو دنیا کا خطرناک ایئرپورٹ تصور کیا جاتا ہے جو دو جزیروں کے درمیان واقع ہے اور پائلٹ کو انتہائی محتاط انداز میں لینڈنگ کے وقت سیاحوں کے اوپر سے طیارے کو لینڈ کرنا ہوتا ہے۔

نیپال کے لکلا ایئرپورٹ کو بھی دنیا کے خطرناک ترین ایئرپورٹس میں شمار کیا جاتا ہے۔ پائلٹ کو اونچی چٹانوں میں داخل ہونے کے بعد طیارے کو لینڈ کرانا ہوتا ہے۔ آئرلینڈ کا جولین ایئرپورٹ ساحل سمندر پر واقع ہے۔ طیارہ لینڈ یا ٹیک آف ہونے کی صورت میں اس طرح گمان ہوتا ہے کہ وہ ساحل پر موجود لوگوں سے ٹکرا جائے گا۔

اسی طرح فرانس کا کورچیول ایئرپورٹ 6 ہزار 588 فٹ بلندی پر واقع ہے جس کے ارد گرد برف سے ڈھکے بلند و بالا پہاڑ ہیں جبکہ فرانس کا گسٹاف ایئرپورٹ فرانس کے جزیرہ سینٹ برتھ لیمی میں واقع ہے جہاں صرف چھوٹے چارٹرڈ طیارے ہی لینڈ کرتے ہیں۔ اس ایئرپورٹ کی خطرناک بات یہ ہے کہ اس کا رن وے سڑک سے کئی فٹ نیچے ہے اور طیارے کو ڈھلوان میں لینڈ کرانا پڑتا ہے اور طیارے کو اڑانے کے لئے پائلٹ کو ایئرپورٹ سے متصل آبادی کے اوپر سے پرواز بھرنی پڑتی ہے:۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *