عمران خان مہرہ بن گئے

محمد اقبال قریشی

muhammad iqbal qureshi

ہنسی مذاق اور سستی نیم سیاسی جگتیں اپنی جگہ ۔۔۔۔۔۔ لیکن اگر آپ سب خوشیاں منانے سے فارغ ہو گئے ہیں تو کچھ تازہ زمینی حقائق پیش کرنے کی اجازات چاہوں گا، بطاہر اس فیصلے کے پس منظر میں جہاں تحریک انصاف کی سیاسی جدوجہد کا تھوڑا بہت عمل دخل ہے وہیں اس بات کی جانب شاید کسی کا دھیان نہیں جارہا کہ شریف خاندان کے بعض خفیہ ہاتھوں نے بھی عدالت کو ثبوت فراہم کرنے ، اور تحریک انصاف کے چند بڑوں کے ساتھ خفیہ تعاون کے ساتھ ساتھ اس نااہلی کے فیصلے میں انتہائی اہم کردار ادا کیا۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ اس سے پہلے کہ اس پر بات کی جائے کہ شریف خاندان کو اس سے کیا فائدہ ملا، ایسی ہی یا اس سے ملتی جلتی صورتحال اس وقت تحریک انصاف میں درون خانہ چل رہی ہے ، وہاں بھی بعض عناصر عمران خان اور جہانگیر ترین کو ناہل کروانے کی بھرپور کاغذی تیاری کر چکے ہیں ،۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ نواز شریف ، عمران خان اور جہانگیر ترین سمیت چند بڑے مہروں کے راستے سے ہٹتے ہی ، مافیا ایک نئی شکل میں سامنے آئے گا ، مجھے کہنے دیجیے کہ یہ مافیا مجھ سے بھی زیادہ شاطر اور مکار ثابت ہوا ہے ، اس نے ایک طرف عدلیہ کو اپنے مقاصد کے لیے اس طرح استعمال کیا کہ عدلیہ کو بظاہر یہی لگا کہ اس کے ساتھ تعاون کیا جارہا ہے ، لیکن درحقیقت عدلیہ کو اس سارے معاملے میں ٹشو پیپر کی طرح استعمال کیا گیا ، ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ اس تمام کارروائی کا فائدہ جس جس کو ہوا وہ مستقبل کی سیاسی و نام نہاد جمہوری قیادت میں سر فہرست نظر آئیں گے ، یوں سب کو اندازہ ہوتا جائے گا کہ اس گریٹ جوڈیشل کانسپریسی میں کس کس نے کیا کیا کردار ادا کیا ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ کرپشن کے خلاف لڑے جانے والے اس کیس میں کس کس نے کیا کیا کرپشن کی ، کس کس کو درپردہ کتنا مال پانی لگایا گیا، اس کا ریکارڈ بھی مافیا نے محفوظ کر لیا ہے تاکہ مستقبل کی سیاسی و عدالتی قیادت کو مٹھی میں کیا جاسکے ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ اس طرح کی کارروائیاں اور سازشیں تبھی ممکن ہوا کرتی ہیں جب ایک کانسٹیبل سے کر قانون کی سب سے اونچی کرسی پر بیٹھنے والے تک سب لوگ جرائم پر مبنی فلموں اور سستے جاسوسی ناولوں کے شیدائی ہوں ، مزید یہ کہ خوشیوں کے شادیانے بجانے والوں کو خبر ہو کہ اس سارے کھیل میں عمران خان کی حیثیت ایک مہرے کے سوا کچھ نہیں 

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *