سرجری کے دوران پاکستانی نژاد ڈاکٹر کے شرمناک کام نے نرس کی دوڑیں لگوادیں!

لندن -آپریشن تھیٹر میں ڈاکٹر مریض کا جسم چیرنے پھاڑنے کے علاوہ اگر کچھ کر سکتے ہیں تو وہ خدا ہی کو یاد کر سکتے ہیں کہ ایسا منظرسامنے ہو تو انسان کو اور سوجھ ہی کیا سکتا ہے۔ مگر نہیں، کچھ ہوس زادے ایسے بھی ہوتے ہیں جنہیں شاید کسی بھی حالت میں موت یاد نہیں آتی۔برطانیہ میں ایسے ہی ایک پاکستانی نژاد ڈاکٹر نے گزشتہ دنوں آپریشن تھیٹر میں مریض کی سرجری کرتے ہوئے پاس موجود نرس کے ساتھ ایسی شرمناک حرکت کر دی کہ یقین کرنا ہی مشکل ہے۔ میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق 38سالہ فیصل خان نامی اس ڈاکٹر نے دوران آپریشن معاونت کرنے والی نرس کے ساتھ زبردستی بوس و کنار شروع کر دیا۔

رپورٹ کے مطابق متاثرہ نرس نے عدالت میں بتایا ہے کہ ”فیصل خان نے آپریشن کے دوران مجھے کہا کہ ’تم نے زیرجامہ پہن رکھا ہے؟’ پھر ہنسنے لگا اور کہا کہ ’تم پریشان مت ہو، میں ابھی خود ہی پتا چلا لیتا ہوں۔‘ یہ کہہ کر اس نے مجھے زبردستی پکڑ کر اپنے قریب کیا اور میرے جسم کو چھونا شروع کر دیا اور بوس و کنار کرنے لگا۔اس پر میں رونے لگی اور میرا جسم خوف سے کانپنے لگا۔ تب اس نے مجھے چھوڑ دیا اور میں آپریشن تھیٹر سے باہر بھاگ گئی۔“واضح رہے کہ یہ شرمناک اور انسانیت سوز واقعہ برطانوی شہر ٹاﺅنٹن کے موسگروو پارک ہسپتال میں پیش آیا۔ ڈاکٹر فیصل کے خلاف مقدمے کی کارروائی جاری ہے :-

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *