کراچی میں بارش نے تباہی مچادی، لوگ چھتوں پرمحصور ہوگئے!

کراچی -کراچی میں وقفے وقفے سے موسلادھاربارش،اہم شاہراہیں اورسڑکیں تالاب بن گئیں، کرنٹ لگنے اور مختلف واقعات میں 6 افراد جاں بحق ہو گئے جبکہ تعلیمی اداروں میں چھٹیوں کا اعلان کر دیا گیا ،بارش کے باعث ٹریفک کا نظام درہم برہم ہو گیا،تفصیلات کے مطابق کراچی میں بارشیں زحمت بن گئیں ، ہر طرف پانی ہی پانی جمع ہے جبکہ سڑکیں تالاب اور جوہڑ کا منظر پیش کر رہی ہیں، محکمہ موسمیات کے مطابق لانڈھی میں 20،مسروربیس میں 42،صدر 40،گلستان جوہرمیں27، ایئرپورٹ 26،فیصل بیس29،گلشن حدیدمیں 16ملی میٹربارش ریکارڈکی گئی ،کراچی میں سب سے زیادہ بارش ناظم آبادمیں 67 ملی میٹرریکارڈکی گئی،سٹیڈیم روڈ،ملیر، نرسری،شارع فیصل پانی میں ڈوب گئیں،ناگن چورنگی،محمودآباد،صدرسمیت دیگر علاقے بارش سے متاثرہوئے ،ٹھٹھہ اورگردونواح میں وقفے وقفے سے بارش سے شاہی بازارمیں ایک سے 2 فٹ تک پانی جمع ہو گیا اس کے علاوہ تھرپارکرکے مختلف علاقوں میں بھی وقفے وقفے سے بارش کا سلسلہ جاری ہے ، بارش کے باعث کرنٹ لگنے کے مختلف واقعات میں 4 ،دیگر واقعات میں 2 افراد جاں بحق ہو گئے ،بارش کے باعث کراچی میں 40 فیڈرز ٹرپ کر گئے جس کے باعث مختلف علاقوںمیں بجلی بنداور شہریوں کو شدید مشکلات کا سامنا ہے ، جبکہ شہر کے مختلف مقامات پرآتشزدگی کے واقعات پر فائر بریگیڈ کو طلب کر لیا ، آتشزدگی واقعات کارساز،سوک سینٹر،گارڈن،جامع کلاتھ میں رہائشی عمارتوں میں پیش آئے ، فائر بریگیڈ حکام کے مطابق آگ لگنے کے واقعات شارٹ سرکٹ کے پیش آئے جس پر قابو پا لیا گیا ،بارش کے باعث تعلیمی اداروں میں چھٹیوں کا اعلان کردیا گیا ، سیکرٹری تعلیم کے مطابق بارش کے باعث طلبا کو سکول جانے میں مشکلات تھیں ، ناخوشگوار واقعات سے بچنے کیلئے سکولوں میں چھٹیوں کا اعلان کیا گیا ہے عید کے بعد تعلیمی ادارے معمول کے مطابق ہی کھلیں گے :-

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *