پاکستان نے شمالی کوریا کونیوکلیر ٹیکنالوجی نہیں دی، وزیراعظم شاہد خاقان عباسی

Related image

نیویارک -وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی نے کہا ہے کہ امریکی صدر ٹرمپ کی انسداد دہشتگردیمیں پاک امریکا پارٹنر شپ پررائے مثبت ہے، پاک امریکا تعلقات میں کسی تبدیلی کی توقع نہیں رکھتا، ہم دہشت گردی کےخلاف جنگ میں پارٹنرہیں،افغان مسئلے پر نائب امریکی صدر سے ہونے والی ملاقات بھی مفید رہی جبکہ افغانستان میں امن کے لئے ہم مل کر کام کر رہے ہیں ،بھارت پاکستان کےلیے خطرہ ہے،عالمی میڈیا پاکستان کی درست عکاسی اور صحیح صورتحال نہیں دکھا رہا ،پاکستان نے دہشتگردی کےخلاف جنگ میں اہم کامیابیاں حاصل کیں۔

تفصیلات کے مطابق اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی میں شرکت کے لئے امریکہ میں موجود وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی نے ’’ پاک امریکہ بزنس کمیونٹی‘‘سے خطاب اور میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ امریکی صدر ٹرمپ سے ہونے والی ملاقات مفید رہی ،ڈونلڈ  ٹرمپ کی انسداد دہشتگردی میں پاک امریکا پارٹنر شپ پررائے مثبت ہے ،پاکستان پاک امریکا تعلقات میں کسی تبدیلی کی توقع نہیں رکھتا، پاک امریکہ تعلقات میں اتار چڑھائو آتے رہتے ہیں، ہم دہشت گردی کےخلاف جنگ میں پارٹنر اور امریکی صدر ٹرمپ کے ساتھ مل کرکام کرنے کے خواہاں ہیں،پاکستان اور امریکہ کادشمن مشترکہ ہے۔ انہوں نے کہا کہ  افغانستان کے معاملے پر امریکی نائب صدر سے ملاقات بہت مفید رہی،افغان امن کے لئے امریکہ کے ساتھ مل کر کام کر رہے ہیں ،شمالی کوریا کو ذمہ دار ملک کا کردار ادا کرنا چاہئے۔ وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی کا کہنا تھا کہ پاکستان نے دہشتگردی کےخلاف جنگ میں اہم کامیابیاں حاصل کیں، بھارت پاکستان کےلیے خطرہ ہے۔ہم نے بھارتی خطرے کے باعث نیو کلیر ٹیکنالوجی حاصٰل کی  ،پاکستان نے دہشتگردی کے خلاف جنگ میں قیمتی جانی نقصان اٹھایا، دہشتگردی کےخلاف جنگ میں فورسزکے ہزاروں جوان اورسویلینزشہید ہوئے،عالمی میڈیا پاکستان کی صحیح صورتحال نہیں بتارہا ،جبکہ ہم دہشتگردی کے خلاف کارروائی میں امریکا کےساتھ کام کر رہے ہیں۔وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ   واضح کر دوں کہ ہم نے شمالی کوریا کونیو کلیر ٹیکنالوجی نہیں دی۔

وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کا کہنا تھا کہ ہماری جماعت نے تین دن میں نیا وزیراعظم منتخب کرکے جمہوری تسلسل برقرار رکھا،جب 2013 میں حکومت سنبھالی تو حالات بہت مشکل تھے ، شرح نمو 2.5 فیصد تھی ،لیکن اب بہت بہتر ی ہو گئی ہے،کراچی کے حالات بھی پہلے سے بہت بہتر ہیں، پاکستانی سٹاک مارکیٹ کی دنیا میں نمایاں کارکردگی رہی، ہائی ویز کے منصوبوں پر 11ارب ڈالر خرچ کیے جا رہے ہیں۔شاہد خاقان عباسی کا کہنا تھا کہ ہم حکومت میں آئے تو گیس درآمد کی صورت حال بہت مشکل تھی، آج ہرصارف کی ضرورت کے مطابق گیس موجود ہے، گزشتہ چار سال میں توانائی کے شعبے میں اقدامات کیے، توانائی کے شعبے میں 10ہزار میگاواٹ کا اضافہ کیا گیا ہے، ہم بجلی گھروں ،ٹرانسمیشن لائنز پر کام کر رہے ہیں، 2030 تک پاکستان دنیا کی  20ویں بڑی معیشت ہوگا ۔وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی کا کہنا تھا کہ سرمایہ کاروں کیلیے پاکستان محفوظ ملک ہے ، پاکستان میں موجودہ امکانات سے فائدہ اٹھانے کی ضرورت ہے، امریکی کمپنیاں پاکستان میں معاشی مواقع سے فائدہ اٹھائیں۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *