نوازالدین صدیقی کی ماں دنیا کی 100 متاثر کن خواتین میں شامل!

View image on Twitter

برطانوی نشریاتی ادارے بی بی سی نے 2017 کی دنیا بھر کی 100 متاثر کن خواتین میں بھارتی اداکار نوازالدین صدیقی کی والدہ کو شامل کرلیا۔ برطانوی ادارہ ہر سال اس فہرست کا اجراء کرتا ہے، رواں برس یہ فہرست پانچویں بار شائع کی جا رہی ہے۔

اس فہرست میں 100 خواتین کو شامل کیا جانا ہے، تاہم فی الحال نشریاتی ادارے نے صرف 60 خواتین کی فہرست شائع کی ہے، جب کہ دیگر 40 خواتین کی فہرست آئندہ ماہ اکتوبر میں شائع کی جائے گی۔ اس سال سو خواتین کو آج کی خواتین کو درپیش چار بڑے مسائل سے نمٹنے کا چیلنج دیا گیا ہے۔

ان مسائل میں خواتین میں شرح تعلیم کی کمی، عوامی مقامات پر ہراساں کیا جانا، کھیلوں میں صنفی امتیاز اور کسی شعبے میں آگے بڑھنے سے روکنے والی غیراعلانیہ رکاوٹ شامل ہے۔تیزاب حملے کا نشانہ بننے والی پاکستانی نژاد ریشم خان کا نام بھی فہرست میں شامل—فوٹو: ٹوئٹر

اس بار اب تک کی فہرست میں پاکستانی گلوکارہ مومنہ مستحسن سمیت پاکستانی نژاد برطانوی نوجوان لڑکی ریشم خان کو بھی شامل کیا گیا ہے۔ ریشم خان پر برطانیہ میں تیزاب سے حملہ کیا گیا تھا، لیکن وہ اس کے باوجود ہمت و بہادری سے زندگی کا مقابلہ کر رہی ہیں۔ اسی فہرست میں بھارت کی بھی 4 خواتین کو شامل کیا گیا ہے، جن میں بھارتی کرکٹ ٹیم کی کپتان سمیت بولی وڈ ادکارہ نوازالدین صدیقی کی 65 سالہ والدہ مہرالنساء صدیقی بھی شامل ہیں۔

نوازالدین صدیقی نے اپنی والدہ کا نام 100 متاثر کن خواتین کی فہرست میں شامل ہونے پر ان کے ساتھ اپنی ایک تصویر ٹوئیٹ کی، جس میں انہوں نے لکھا کہ ’ وہ ایک خاتون جنہوں نے ایک چھوٹے سے گاؤں میں رہنے کے باوجود قدامت پسند خاندان میں ہونے والی مشکلات کو دور کرنے میں کردار ادا کیا‘۔View image on Twitter

اسی فہرست میں بھارتی کرکٹ ٹیم کی کپتان میتھالی راج، نوجوان رائٹر رپی کور، خواتین کے حقوق سے متعلق سرگرم کارکن ڈاکٹر اروشی ساہنی اور بھارتی نژاد امریکی تعلیم دان نتیا تھوماچیلتی کو بھی شامل کیا گیا ہے۔ اس فہرست میں قطر کی ماڈل ناول اکرام، عراق کی طالبہ زینب فدال، ناسا کی خلاءباز پیگی وائٹسن، لائبریا کی صدر ایلن جونسن شیرلیف اور انگلش فٹبالر اسٹیف ہوفٹن بھی شامل ہیں :-

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *