بھارت میں سعودی آرامکو کی کاروباری سرگرمیوں میں توسیع

10x3 Direction 2 (1)سعودی عرب کی سرکاری تیل کمپنی آرامکو نے بھارت کے دارالحکومت نئی دہلی کے نزدیک ایک نئے منصوبے پر کام شروع کیا ہے۔

بھارت کے وزیر تیل دھرمیندر پرادھن نے آرامکو کے چیف ایگزیکٹو امین نصر کے ساتھ مل کر اتوار کے روز اس منصوبے کا افتتاح کیا ہے۔انھوں نے اس موقع پر کہا کہ اس اقدام سے سعودی عرب اور بھارت کے درمیان ہائیڈرو کاربن کے شعبے میں تزویراتی شراکت داری کی راہ ہموار ہوگی۔

سعودی آرامکو نے گذشتہ سال اپنی ذیلی کمپنی آرامکو ایشیا انڈیا ( اے اے آئی) کے ذریعے بھارت میں باضابطہ طور پر کاروباری سرگرمیوں شروع کی تھیں۔آرامکو بڑی مارکیٹوں میں تیل صاف کرنے کے کارخانوں میں سرمایہ کاری کررہی ہے اور آیندہ سال ابتدائی طور پر اسٹاک مارکیٹ میں اس کے حصص فروخت کیے جائیں گے۔

بھارت کے کاروباری ادارے بھی تیل صاف کرنے اور پیٹرو کیمیکل کے منصوبوں میں سرمایہ کاری کے خواہاں ہیں۔سعودی عرب اس وقت بھارت کی تیل کی مانگ کو پورا کرنے والا دوسرا بڑا ملک ہے اور اس کو زیادہ سے زیادہ تیل فروخت کرکے عراق کی جگہ لینے کے لیے کوشاں ہے۔اس وقت عراق بھارت کو تیل اور اس کی مصنوعات کا بڑا برآمد کنندہ ملک ہے۔

آرامکو کے سربراہ امین نصر آج اتوار کو نئی دہلی میں منعقدہ سرا کانفرنس میں بھی شرکت کرنے والے تھے۔اس کانفرنس میں تیل برآمد کرنے والے ملکوں کی تنظیم اوپیک کے سیکریٹری جنرل محمد برکیندو کی شرکت بھی متوقع تھی ۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *