جنرل رضوان اختر کی قبل از وقت ریٹائرمنٹ پر سینیٹ میں سوالات

انٹرسروسز انٹیلی جنس کے سابق سربراہ اور نیشنل ڈیفنس یونیورسٹی کے صدر لیفٹیننٹ جنرل رضوان اختر کی قبل از وقت ریٹائرمنٹ پر سینٹیرز نے سوالات اٹھادیے ہیں۔
سینیٹ اجلاس کے دوران جمیعت علما اسلام ف کے سینیٹر حافظ حمداللہ نے کہا کہ ایک تجربہ کار جنرل نے کیوں وقت سے پہلے استعفی دیا ہے کوئی سیاسی جماعت ہے جو اس حوالے سے سوال کرے، کوئی پوچھے گا کہ وقت سے پہلے استعفی دینے کی وجوہات کیا ہیں۔
حافظ حمداللہ نے کہا کہ ایک ایسا افسر جس نے کراچی جیسے اہم علاقے میں بھی فرائض سرانجام دیے اور ایک اہم عہدے پر فائز جنرل نے کیوں استعفی دیا ہے اور کیا وجوہات ہیں کہ جنرل رضوان اختر نے ایک سال پہلے ہی استعفی دے دیا۔
پاکستان مسلم لیگ ن کے سینیٹر سلیم ضیا نے اس موقع پر کہا کہ ایک وزیر استعفی دے تو اس کے گھر کے باہر ڈیرے ڈال دیے جاتے ہیں لیکن ایک آرمی افسر استعفی دے تو کوئی سوال نہیں کرتا۔
یاد رہے کہ دوروز قبل لیفٹننٹ جنرل رضوان اختر نے اچانک قبل ازوقت ریٹائرمنٹ لے لی تھی۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *