کمار سانو نے ریستوران کھول لیا

بالی وڈ کے معروفkumar sanu سنگر کمار سانو نے اپنے آبائی شہر میں ریسٹو بار کا افتتاح کر دیا جہاں کھانوں کے علاوہ موسیقی سے بھی لوگ لطف اندوز ہونے کی سہولت سے فائدہ اٹھا پائیں گے۔ دم لگا کہ ہیشہ نامی اس ریسٹو بار کا نام 2015 کی ایک بالی وڈ فلم کے نام سے رکھا گیا ہے ۔ اس موقع پر کمار سانو نے کہا کہ ان کے مداح یہاں آ کر ان کے گانوں اور زندگی کے سفر سے واقفیت حاصل کر پائیں گے۔ اس بڑے ہوٹل کا افتتاح پروسن جیت چیٹر جی نے درگا پوجا سے قبل کیا۔ اس ہوٹل کی دیواروں کو ایسے پوسٹرز سے سجایا گیا ہے جن سے ساٹھ سالہ کمار سانو کی زندگی کے اہم واقعات شامل ہیں۔ کمار سانوں کی کامیابی کا سفر 1988 میں ہیرو ہیرالال  سے شروع ہوا۔ کمار سانو کا نام کدھارناتھ بھٹا چاریہ تھا  جو انہوں نے 1990 میں بدل کر کمار سانو رکھ لیا۔ انہیں پہلا فلم فئیر ایوارڈ 1990 میں عاشقی فلم ین کام پر ملا۔ سانوں اپنے کیریر مین تمام معروف سنگرز جن میں ندیم شراون، انو ملک، جتن للت، ہمیش رشمیا، راجیش روشن، ویجو شاہ  اور انند ملند  شامل ہیں کے ساتھ کام کر چکے ہیں۔

ریسٹوبار میں پیش کیے گئے کھانوں میں نارتھ انڈین، چائنیز اور بنگالی کھانے شامل تھے ۔ پومفریٹ تندوری، جگلی کباب، سموکڈ بکتی، فش ملائی تکہ جیسے مزیدار کھانے شامل تھے۔ دم لگا کے ہیشہ نامی اس ہوٹل کو میوزک ریسٹو بار  کے طور پر جاننا بہتر ہو گا۔ یہاں لوگ مغلی، نارتھ انڈین، چائنیز اور بر اعظمی موسیقی سے بھی لطف اندوز  ہو سکتے ہیں۔

سنگر کا کہنا تھا کہ وہ دہلی، ممبئی، اور بنگلور میں ہوٹل چین کھلونے کے خواہشمند ہیں اور انہیں اس سلسلے میں بہت سے لوگ  فرنچائز آفر بھی دے رہے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ ایک بنگالی کی حیثیت سے وہ ہمیشہ اپنی ریاست کو وہ سب لوٹانا چاہتے ہیں جو انہیں یہاں سے ملا ہے۔ 

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *