بھارتی فوج کی بٹل سیکٹرمیں پاکستانی سکول وین پر فائرنگ، پاک فوج نے جوابی کاروائی میں بھارتی چوکی تباہ کردی

راولپنڈی: (دنیا نیوز) بھارت کا جنگی جنون کم نہ ہوا۔ مودی سرکار ایک بار پھر غیرانسانی اور اوچھے ہتھکنڈوں پر اتر آئی۔ بھارتی فوج نے بٹل سیکٹر میں سکول وین پر فائرنگ کی۔آئی ایس پی آر کے مطابق، بھارتی فائرنگ سے وین ڈرائیور شہید ہو گیا۔ بھارت مسلسل دہشتگردی سے شہریوں کو ہراساں کر رہا ہے۔ بھارتی فورسز مسلسل شہریوں کو نشانہ بنا رہی ہیں۔ آئی ایس پی آر کے مطابق، بھارت کی جانب سے جینوا معاہدے کی کھلم کھلا خلاف ورزیوں کا سلسلہ جاری ہے۔

پاک فوج نے بھارتی اشتعال انگیزی کا منہ توڑ جواب دیتے ہوئے بھارتی چوکی تباہ کردی۔آئی ایس پی آر کے مطابق پاک فوج نے ایل او سی پر تتہ پانی سیکٹر میں شہریوں کو نشانہ بنانے والی بھارتی پوسٹ تباہ کر دی جس کے نتیجے میں 5 بھارتی فوجی ہلاک اور متعدد زخمی ہو گئے۔

آئی ایس پی آر کا کہنا ہے کہ بے گناہ شہریوں کے خلاف بھارتی دہشت گردی کا منہ توڑ جواب دیا جائے گا۔وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی کی جانب سے بٹل سیکٹر میں سکول وین پر بھارتی فائرنگ کی شدید مذمت کی گئی ہے اور کہا گیا ہے کہ اس طرح کے واقعات سے بھارت کا چہرہ بے نقاب ہو گیا ہے، معصوم بچوں کو نشانہ بنانا جینوا کنونشن کی بھی خلاف ورزی ہے۔ فائرنگ کے معاملے پر بھارتی ڈپٹی ہائی کمشنر کو دفتر خارجہ طلب کیا گیا اور احتجاجی مراسلہ دیا گیا۔ مراسلے میں بھارت کو تنبیہ کی گئی ہے کہ وہ جینوا کنونشن کی خلاف ورزی نہ کرے۔ مراسلے میں کہا گیا ہے کہ بھارتی بلااشتعال فائرنگ سے سکول وین ڈرائیور شہید جبکہ بچے زخمی ہوئے۔ ڈی جی ساؤتھ ایشیاء ڈاکٹر فیصل نے احتجاجی مراسلہ بھارتی ڈپٹی ہائی کمشنر جے پی سنگھ کے حوالے کیا۔ اس حوالے سے اپنے بیان میں ترجمان دفتر خارجہ نے کہا کہ جنگ کے دنوں میں بھی سکولوں اور ہسپتالوں پر حملے نہیں کئے جاتے لیکن بھارت نے تو تمام حدیں عبور کر لی ہیں۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *