علی ظفر کا میشا شفیع کو نوٹس: ٹویٹ حذف کر کے معافی مانگیں یا 100 کروڑ ہرجانہ دیں

پاکستانی گلوکار علی ظفر نے گلوکارہ میشا شفیع کے نام ہتک عزت کا نوٹس بھجوایا دیا ہے۔

اس نوٹس میں میشا شفیع سے وہ ٹویٹ حذف کرنے کا مطالبہ کیا گیا ہے جس میں انھوں نے الزام لگایا تھا کہ علی ظفر نے انھیں جنسی طور پر ہراساں کیا تھا۔ میشا شفیع سے معافی مانگنے کا مطالبہ بھی کیا گیا ہے یا بصورت دیگر 100 کروڑ ہرجانہ ادا کرنے کو کہا گیا ہے۔

خیال رہے کہ میشا شفیع نے گذشتہ دنوں ایک ٹویٹ میں علی ظفر پر الزام لگایا تھا کہ ان کی جانب سے میشا کو جنسی طور پر ہراساں کیا گیا تھا۔

انھوں نے اپنی ٹویٹ میں کہا تھا ’میری ہی انڈسٹری میں میرے ساتھ کام کرنے والے ایک ساتھی نے مجھے ایک سے زیادہ بار جنسی طور پر ہراساں کیا: علی ظفر نے۔ یہ سب تب نہیں ہوا جب میں چھوٹی تھی، یا انڈسٹری میں نئی تھی۔ یہ میرے ایک پراعتماد، کامیاب، اور چپ نہ رہنے والی عورت ہونے کے باوجود ہوا۔ یہ میرے ساتھ دو بچوں کی ماں ہونے کے باوجود ہوا!‘

ٹویٹ کے سامنے آنے کے بعد ہی علی ظفر نے اپنے ٹوئٹر اکاؤنٹ پر اس الزام کو جھوٹا قرار دیا تھا اور کہا تھا کہ وہ معاملے کو عدالت میں لے کر جائیں گے۔

 

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *