ہندوستان: گرو کے حکم پر400مردوں نے ’بھگوان سے قریب ترہونے‘ کیلئے اپنے ٹیسٹس کٹوائے!

guru ramارب پتی مذہبی ’’گرو‘‘ گرمیت رام رحیم سنگھ نے دنیا بھر میں موجود اپنے 50ملین عقیدت مندوں میں سے تقریباً400کو ’’بھگوان سے قریب ترلانے‘‘ کیلئے اپنے ٹیسٹس کاٹنے پر آمادہ کر لیا۔
اس عجیب اور غیرمعمولی واقعے کی تفصیلات منظرعام پرتو اب آئی ہیں مگر یہ واقعہ رونما 2000ء میں ہندوستان میں رام رحیم کی جانب سے چلائے جانے والے ایک اسپتال میں ہوا تھا۔
ہندوستان کی مرکزی بیورو آف انویسٹی گیشن نے رام رحیم کو 400مردوں کو شدید نوعیت کا جسمانی نقصان پہنچانے کا ذمہ دار ٹھہرایا ہے اور اب وہ زیر تفتیش ہے۔ 2002ء میں رام رحیم، ایک تفتیشی صحافی کے قتل پرزیر تفتیش رہا ۔ اس کے علاوہ، بعض خواتین پیروکاروں کی جانب سے اس پر جنسی حملوں کا الزام بھی لگایا جاتا رہا ہے تاہم اس الزام پر کبھی اس کے خلاف مقدمہ درج نہیں ہوا۔
نوکرن سنگھ، جو کہ اب تک ٹیسٹس کٹنے کے اکلوتے شکار کے طور پر سامنے آنے والے ہنس راج چوہان کا وکیل ہے، نے کہا ہے کہ اس کا مؤکل اور دوسرے شکار یہ سمجھتے تھے کہ اگر انہوں نے رام رحیم کی جانب سے مطالبہ کیا جانے کے بعدیہ آپریشن کروانے سے انکار کر دیا توان کا سماجی مقاطعہ کر دیا جائے گا۔

loading...

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *