مہنگی ترین سعودی کمپنی اپنے حصص بیچنے کو تیار

تیل کی قیمیتوں میں خاطر خواہsaudi aramco کمی کو جواز سمجھ لیں یا پھر سعودی ایران تعلقات کو، نتیجہ یہ ہے کہ سعودی عرب اپنی بیش قیمت کمپنی aramco کے IPO کے لیے تیار ہو گیا ہے۔ اس خبر کے آتے ہی دنیا کی سٹاک مارکیٹوں میں سنسنی پھیل گئی ہے۔ سعودی سنطلنت کے قائم مقام شہزادے محمد بن سلمان نے جریدے ’’ اکانومسٹ‘‘ سے بات کرتے ہوے بتایا کہ یہ قدم کمپنی کی ترقی کے لیے اُٹھایا گیا ہے، اس سے کمپنی معاملات میں مزید شفافیت آئے گی۔ اُن کا یہ بھی کہنا تھا کہ یہ قدم سعودی عرب میں آنیوالی انقلابی معاشی تبدیلی کا حصّہ ہے۔ اندرونی زرائع کا ماننا ہے کہ ایک اندازے کے مطابق زیرِ بحث کمپنی کی قیمت تیس کھرب ڈالر سے بھی زیادہ ہے مگر یہ کمپنی اپنے تمام معاملات کو رخفیہ رکھتی ہے اور کمپنی کے اندرونی معاملات کی کسی کو زیادہ خبر نہیں ہوتی۔شہزادے نے کمپنی کے حصص کی فلوٹنگ کے لیے اعلیٰ سطح کی ملاقاتیں بھی کی ہیں ۔ سعودی ایران بحران کے بارے میں بات کرتے ہوے محمد بن سلمان کا کہنا تھا کہ وہ کسی طور اس معاملے کو مزید بڑھانے کے حق میں نہیں ہیں۔مگر اُن کے4 جنوری کو دیے گئے اس بیان کے فوراََ بعد 7 جنوری کو ہی ایران کا یہ دعویٰ سامنے آیا کہ سعودی عرب نے اُس کی یمن میں موجود امبیسی پر جنگی جہازوں سے حملہ کیا ہے۔

مہنگی ترین سعودی کمپنی اپنے حصص بیچنے کو تیار” پر بصرے

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *