بھارت کو 10 دہشت گردوں کے داخل ہونے کی اطلاع دی، وزیرداخلہ چوہدری نثار

Nisar

اسلام آباد -وفاقی وزیرداخلہ چوہدری نثار نے 10 دہشت گردوں کی بھارت جانے کی تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان میں 40 سے زیادہ دہشت گرد گروپ سرگرم ہیں جب کہ نائن الیون میں کوئی پاکستانی ملوث نہیں تھا لیکن اس کے باوجود دہشت گردی کی جنگ ہم پر مسلط کی گئی۔ سینیٹ اجلاس میں بیان دیتے ہوئے وزیر داخلہ چوہدری نثار نے کہا کہ پاکستان میں 40 سے زیادہ دہشت گرد گروپ سرگرم ہیں لیکن داعش کا کوئی وجود نہیں، پرانی تنظیمیں داعش کا نام استعمال کرکے اس خوف کو کیش کرارہی ہیں، آئی بی نے 3 گروپ پکڑے جن میں سے ایک کا تعلق جماعت الدعوۃ سے ہے۔ انہوں نے کہا کہ افغانستان سے داعش و دہشت گردی کے معاملات پر بات ہورہی ہے، عسکری تنظیموں کے افغانستان میں ریڈیو اسٹیشنز تشویشناک ہیں جب کہ کسی افغانی کو پاکستانی کارڈ جاری نہیں ہونے دوں گا اور ایسا کرنے والوں کو جیل جانا ہوگا۔ چوہدری نثار نے 10 دہشت گردوں کی بھارت جانے کی تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ انٹیلی جنس شیئرنگ صرف بھارت سے نہیں بلکہ خطے کے دوسرے ملکوں کے ساتھ بھی ہے، افغانستان کے ساتھ اس سے بھی زیادہ انٹیلی جنس شیئرنگ ہے۔ انہوں نے کہا کہ بہت سے غیر ریاستی عناصرکے اقدامات پاکستان اور اس کے اداروں کے گلے پڑجاتے ہیں لیکن اب ایسے عناصر سے جان چھڑانے کے لیے سول وملٹری سطح  پرکوششیں کررہے ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ نائن الیون کے حملوں میں کوئی بھی پاکستانی ملوث نہیں تھا، آمر کے غلط فصلوں سے دہشت گردی کی یہ جنگ ہم پر مسلط ہوئی اور مناسب منصوبہ بندی نہ ہونے سے یہ جنگ بڑھتی گئی :-

بھارت کو 10 دہشت گردوں کے داخل ہونے کی اطلاع دی، وزیرداخلہ چوہدری نثار” پر ایک تبصرہ

  • Muhammad TaRa
    مارچ 8, 2016 at 11:52 PM
    Permalink

    What is happening in Pakistan don't know but what is going to happen in India knows?

    Reply

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *