جنت:جنس اور پیٹ کی آگ ٹھنڈی کرنے کا اڈہ ؟(آخری حصہ)

نوٹ: سائٹ پر دیئے گئے تمام کالمز اور بلاگز مصنفین کی ذاتی آرا ہیں، ادارے کا متفق ہونا ضروری نہیں اس کالم کا پہلا حصہ پڑھنے کے لیے یہاں کلک کریں  پہلے حصے میں یہ واضح کرنی کی کوشش کی گئی تھی کہ جنت اور دوزخ کا بیان قرآن مجید…

جنت : جنس اور پیٹ کی آگ ٹھنڈی کرنے کا اڈہ ؟

نوٹ: سائٹ پر دیئے گئے تمام کالمز اور بلاگز مصنفین کی ذاتی آرا ہیں، ادارے کا متفق ہونا ضروری نہیں یہ حقیقت ہے کہ ایک لاکھ چوبیس ہزار پیغمبر اصل میں انسان کو یہ بتانے آئے تھے کہ انسان کو اس دنیا میں آزمایش کے لیے پیدا کیا گیا ہے…

چار سالگریں اور ان کا آپس میں تعلق!

اسپتال کی ہنگامہ خیز مصروفیت کی وجہ سے آج لکھنے کا کوئی موڈ نہ تھالیکن پھر فیس بک پر ایک پوسٹ نظر آئی : آپ عیسیٰ(علیہ السلام)، قائد اعظم یا پھر نواز شریف کا برتھ ڈے منا رہے ہیں تو میری طرف سے دلی مبارک باد قبول کیجیے!لیکن میں آج…

مولوی خواجہ سرا ،لبرل اور شریعت (دوسرا حصہ)

پہلاحصہ پڑھنے کے لیے یہاں کلک کیجئے مولوی صاحب کے خواجہ سرا ہونے کے حیرت انگیز انکشاف نے سب کو بری طرح چونکا دیا تھا۔ کسی کی سمجھ میں نہیں آرہا تھا کہ کیا کہے ، آخر وہ خود ہی بولے :’’دوستو،میں اس وقت آپ میں سے کسی کی طرف…

سقوط ڈھا کا :مطالعہ پاکستان کا گم شدہ باب

طلبہ نے خصوصی فرمائش کی ہے کہ اس موضوع پر ضرور لکھوں۔اگر آپ اس بات پر حیران ہو رہے ہیں اس موضوع کو نصاب کا حصہ کیوں نہیں بنایاگیا تو مزید حیران ہو جائیے کہ انٹر اور ڈگری سطح پر یہ بتانا نصاب کا حصہ ہی نہیں کہ پاکستان جب…

12 ربیع الاوّل سوال کرتا ہے!

12 ربیع الاوّل کا دِن ہمیشہ سے مجھے ایک عجیب کیفیت سے دوچار کرتا ہے۔ میں اس دن ذہن میں پیدا ہونے والے سوالوں کے نرغے میں اپنے آپ کو بالکل بے بس پاتا ہوں۔ وقت گزرنے کے ساتھ ساتھ ان سوالات میں اور ان کی معنویت میں شدت ہی…

خواجہ سرا ، مولوی ،لبرل اور شریعت !(پہلا حصہ)

'' کیا حساب ہو گا کسی خواجہ سرا کا؟ اسے ملا ہی کیا ہے ! '' خاص قسم کے لبرل نے اپنے کولیگ مولوی صاحب کو اپنی طرف سے سے دھوبی پٹکا دیتے ہو ئے کہا ۔ مولوی صاحب نے بے چینی سے پہلو بدلتے ہوئے کہا :''اس کا مطلب…

دل کی دنیا کا مردِ درویش: جنید جمشید !

’’ بھائی ، آپ یوں سمجھیں کہ بس میرے پاس کوئی دلیل نہیں ۔۔۔۔‘‘ انھوں نے جھکی نگاہوں سے جملے کا آغاز کیا اور پھرقدرے توقف کے بعد نظریں اٹھائیں تو آنکھیں کسی انجانے خوف سے لبریز تھیں اور جملہ یوں مکمل کیا : ’’ یہ میرے دل کا فیصلہ…

خبر دار ! خبر ناک ،خطرناک ہو رہا ہے !

’’ آپ کو معلوم ہے کہ سلیم البیلا نے ماڈلنگ شروع کر دی ہے ؟‘‘ جب محمد علی میر، یہ الفاظ کہہ رہے تھے تو اکثر یہ سوچ رہے تھے ، وہ ضرور اُس گھسی پٹی جگت کو کام میں لا رہے ہیں جو پروگرام میں مہمانوں کو ہنسانے کے…

خدا حافظ  اورخوش آمدید ! 

آخر پاکستان میں وہ کچھ ہو گیا جو کئی برس پہلے ہونا چاہیے تھا ! اس کا آغاز اس وقت ہوا جب 2013ء میں ایک منتخب سیاسی جماعت نے دوسری منتخب جماعت کو آئین کے مطابق اقتدار منتقل کیا ۔یہ اس آئینی عمل ہی کی برکت تھی کہ اسلام آباد…