جنرل زبیر محمود حیات نے چئیرمین جوائنٹ چیف آف سٹاف کمیٹی کی کمان سنبھال لی

راولپنڈی -جنرل زبیر محمود حیات نے نئے جوائنٹ چیفس آف سٹاف کمیٹی کی کمان سنبھال لی، کمانڈ کی تبدیلی کی پروقار تقریب جوائنٹ سٹاف ہیڈ کوارٹرز راولپنڈی میں ہوئی جہاں جنرل راشد محمود نے جنرل زبیر حیات کو کمان سونپی۔ اس موقع پر جنرل راحیل شریف اور نامزد آرمی چیف جنرل قمر جاوید باوجوہ بھی موجود تھے۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق نئے جوائنٹ چیفس آف سٹاف کمیٹی جنرل زبیر محمود حیات نے کمان سنبھال لی ہے ، انکے  اعزاز میں پروقا ر تقریب  جوائنٹ سٹاف ہیڈ کوارٹرز میں منعقد ہوئی ۔ جنرل زبیر حیات کو تینوں افواج کے دستوں نے گارڈ آف آنر بھی پیش کیا ۔ تقریب میں جنرل قم جاوید باجوہ اور دیگر اعلیٰ فوجی افسران بھی شریک تھے ۔

جنرل زبیر محمود حیات کمان سنبھالنے کے بعد سی جے سی ایس سی کے 17 ویں سربراہ بن گئے ہیں ، ان کا تعلق آرٹلری رجمنٹ سے ہے جبکہ جنرل زبیر محمود حیات انفنٹری ڈویژن کی قیادت بھی کر چکے ہیں ۔ اس کے علاوہ انہوں نے بطور ٖڈی جی سٹریٹیجک پلانزڈویژن بھی فرائض ادا کیے ہیں ۔ وہ کمیبرلے کالج برطانیہ سے فارغ التحصیل ہیں۔ جنرل زبیر محمود حیات اس سے قبل چیف آف جنرل سٹاف کے عہدے پر تعینات تھے۔ دوسری جانب نئے آرمی چیف جنرل قمرجاوید باجوہ کل پاک فوج کی کمان سنبھالیں گے ۔کمان کی تبدیلی کیلئے تقریب کی تیاریاں مکمل کر لی گئی ہیں۔

پاک فوج کی کمان 16ویں سپہ سالار جنرل قمر جاوید باجوہ کو 29 نومبر کی صبح دس بجے سونپی جائے گی۔ تقریب کے باقاعدہ آغاز سے پہلے جنرل راحیل شریف جنرل قمرباجوہ کو جی ایچ کیو میں بیجز لگائیں گے۔ جس کے بعد سبکدوش ہونے والے آرمی چیف اپنے جانشین کے ہمراہ تقریب میں پہنچیں گے۔ جنرل راحیل شریف کو ان کی فرنٹئیر رجمنٹ کا دستہ جبکہ جنرل قمر باجوہ کو ان کی بلوچ رجمنٹ کا دستہ سلامی پیش کرے گا۔

تقریب کے سب سے اہم لمحے میں سبکدوش ہونے والے آرمی چیف جنرل راحیل شریف فوج کی کمان کی چھڑی اپنے جانشین جنرل قمر جاوید باجوہ کو سونپیں گے۔تقریب کیلئے دعوت نامے جاری کرنے کی تیاری شروع کر دی گئی ہے۔ کابینہ کے اراکین سمیت فضائیہ اور بحریہ کے سربراہان تقریب میں شریک ہوں گے۔
اس کے علاوہ چیئرمین جوائنٹ چیف آف اسٹاف کمیٹی جنرل زبیر حیات بھی تقریب میں شریک ہوں گے۔ جبکہ سبکدوش ہونیوالے چیئرمین جوائنٹ چیف آف سٹاف کمیٹی جنرل راشد محمود بھی تقریب میں مدعو ہوں گے۔غیر ملکی سفارتکاروں، ریٹائرڈ اعلیٰ فوجی حکام اور میڈیا کے ارکان کو بھی دعوت نامے جاری کئے جائیں گے :-

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *