حمزہ کافیس بک اسٹیٹس ہٹایا جانا غلطی تھی، مارک زکر برگ

hamza ali abbasiفیس بک کے بانی اور سی ای او مارک زکر برگ نے پاکستانی ماڈل و اداکار حمزہ علی عباسی کے فرانسیسی رسالے چارلی ہیبڈو پر حملے اور اظہارِ رائے کی آزادی کے حوالے سے شیئر کیے گئے فیس بک اسٹیٹس کو ہٹائے جانے کو ایک 'غلطی' قرار دے دیا۔
حمزہ علی عباسی کے اسٹیٹس کوہٹانے کے حوالے سے جب اینجلک منی نامی ایک فیس بک صارف نے زکر برگ سے سوال کیا تو انھوں نے جواب دیا کہ 'میرا نہیں خیال وہ اسٹیٹس ہٹایا گیا ہے۔ ہماری ٹیم سے غلطی ہوئی ہے۔ جسٹن کیا تم اس معاملے کو دیکھ سکتے ہو'؟
فیس بک پر اپنے دیئے گئے کمنٹ میں مارک نے جسٹن اوسوفسکی کو ٹیگ کیا، جن کی پروفائل سے ظاہر ہوتا ہے کہ وہ فیس بک کے گلوبل آپریشنز اور میڈیا پارٹنر شپ کے نائب صدر ہیں۔
یاد رہے کہ پاکستانی ماڈل و اداکار حمزہ علی عباسی کا اتوار کو کہنا تھا کہ فیس بک انتظامیہ نے ان کی پروفائل کو ڈی ایکٹیویٹ کرکے ان کا وہ اسٹیٹس ہٹا دیا ہے جس میں انھوں نے فرانسیسی رسالے چارلی ہیبڈو کے پیرس میں واقع دفتر پر حملے میں ہونے والی ہلاکتوں کی مذمت کی تھی۔
حمزہ علی عباسی نے چارلی ہیبڈو پر حملے کی مذمت کرتے ہوئے کہا تھا کہ 'جب کوئی حضرت محمد ﷺ کی شان میں گستاخی کرتا ہے تو میرا خون کھول اٹھتا ہے تاہم اس سے کسی فرد کو یہ حق حاصل نہیں ہوتا کہ وہ کسی کو قتل کرے۔ان کا مزید کہنا تھا کہ مغرب کو اپنی اظہار رائے کی آزادی کی تعریف کا از سر نو جائزہ لینا چاہیے، دوسری صورت میں دوبلین سے زائد مسلمان آبادی میں سے کوئی بھی اٹھے گا اور ناحق قتل شروع کردے گا۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *