کراچی: ایمبولینسز کے ذریعے غیر قانونی اسلحہ کی ترسیل کا انکشاف

Rangers-operation-in-cetralسندھ کے دارلحکومت کراچی میں دہشت گردی اور ٹارگیٹ کلنگ کی وارداتوں میں استعمال ہونے والے اسلحے کی ترسیل کے حوالے سے رینجرز کا کہنا ہے کہ شہر میں کام کرنے والے کچھ رفاہی ادارے غیر قانونی اسلحہ کی ترسیل میں ملوث ہیں۔
رینجرز کی جانب سے جاری ہونے والے ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ کراچی میں مخلتف سرچ آپریشنز اور ٹارگیٹڈ کارروائیوں میں گرفتار ہونے والے ملزمان نے تفتیش کے دوران یہ انکشاف کیا ہے کہ شہر میں کام کرنے والے رفاہی اداروں کے کچھ ملازمین بھی ایمبولینسز کے ذریعے غیر قانونی اسلحہ کی ترسیل اور اسے چھپانے کا کام کرتے ہیں۔
ترجمان کا مزید کہنا ہے کہ اسلحہ کی غیر قانونی ترسیل ایک جرم ہے اور اس میں ملوث ملزمان کو اسلحہ ایکٹ کے تحت گرفتار کرکے ان کے خلاف قانونی کارروائی کی جائے گی۔انھوں نے شہریوں پرزور دیا کہ وہ غیر قانونی اسلحے اور اس کی ترسیل کے حوالے سے کسی بھی قسم کی معلومات کے حوالے سے سندھ رینجرز کو مطلع کریں تاکہ ایسے عناصر کا سدباب کیا جاسکے۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *