صرف دوگھنٹوں میں تعمیر ہونے والا مکان

3d Houseتعمیرات کے شعبے میں انقلاب برپا کرتے ہوئے ایک چینی کمپنی نے صرف تین گھنٹے میں ایک دو منزلہ مکان بنا دیا ہے۔ان تین گھنٹوں میں مکان کے اندر بجلی، گیس اور پانی کی وائرنگ بھی کی گئی۔ تھری ڈی پرنٹر ٹیکنالوجی کی مدد سے بنائے جانے والے گھر کے ماڈل کو ایک کرین کی مدد سے کھڑا کیا گیا۔ چین کے شمال مغربی صوبے میں بنائے جانے والے اس مکان کو اگر عام حالات میں بنایا جاتاتو اس پر کم از کم چھ ماہ ضرور لگتے۔ تھری ڈی ٹیکنالوجی کی مدد سے ڈیزائن بنانے سے لے کر اس گھر کو قابل رہائش بنانے میں بارہ دن لگے ہیں۔ اس تعمیری کام کے مینیجر نے بتایا کہ اس مکان پر لاگت کا تحمینہ400-480امریکہ ڈالر فی مربع فٹ ہے۔ میٹریل خریدنے اسے اسمبل کرنے، مزدوری اور مشینری کی قیمت منہا ہو جانے کے بعد یہ تھری ڈی مکان بہت سود مند اور سستا پڑتا ہے۔ اس مکان کو بنانے والی کمپنی کا دعویٰ ہے کہ اب اسے ایسا صنعتی فضلہ اور نباتاتی میٹریل حاصل ہو گیا ہے جس سے بننے والے تھری ڈی مکانوں میں اعشاریہ نو شدت کے زلزلے کے جھٹکے سہ جانے کی قوت ہوگی۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *