بلجیئم میں دہشت گردوں کی تلاش: ہائی الرٹ

belgiumبلجیئم میں پولیس مشتبہ شدت پسندوں کو تلاش کر رہی ہے اور دارالحکومت برسلز میں آج دوسرے روز بھی سکیورٹی انتہائی سخت ہے۔ وزیر داخلہ جان جیمبون نے کہا ہے ان کے ملک میں دہشت گردی کا خطرہ پیرس حملوں میں مطلوب صالح عبدالسلام کے خطرے سے کہیں بڑا ہے۔ انھوں نے کہا کہ پولیس کو کئی مشتبہ افراد کی تلاش ہے۔
برسلز میں حملے کے خوف سے سکیورٹی انتہائی سخت ہے اور حکومت اتوار کو سکیورٹی کی صورتحال کا از سرِ نو جائزہ لے رہی ہے۔ میٹرو سروس کو پیر تک بند کر دیا گیا ہے اور لوگوں کو ہجوم سے دور رہنے کے لیے کہا گیا ہے۔ چند گھنٹے قبل پیرس جیسے حملوں کے خدشات کے اظہار کے بعد شہر کے ریستوران اور دیگر مقامات بھی بند کر دیے گئے ہیں۔
شہر کی سڑکوں پر فوج کے دستے گشت کر رہے ہیں اور مبینہ شدت پسند صالح عبدالسلام کی تلاش جاری ہے جن کے بارے میں کہا جا رہا ہے کہ وہ خودکش بیلٹ پہنے ہوئے حملے کے لیے تیار ہیں۔ اطلاعات کے مطابق وہ برسلز سے شام جانے کی کوشش کر رہے تھے۔
یلجیئم کے وزیراعظم چارلس مچل نے ہے کہ ’اسلحے اور دھماکہ خیز مواد سے لیس کئی افراد کی طرف سے کئی مقامات پرحملے کی اطلاعات‘ ملی ہیں ۔ صالح عبدالسلام کو بلجیئم لے جانے والے ڈرائیور نے اپنی وکیل کو بتایا کہ عبدالسلام نے ایک بڑی جیکٹ پہن رکھی تھی اور شاید وہ دھماکے کے لیے تیار تھے۔ یو ایس یورپ کمانڈ نے اپنے فوجی اہلکاروں اور کنٹریکٹرز کے آئندہ 72 گھنٹوں تک برسلز جانے پر پابندی عائد کر دی ہے جبکہ سفارتخانے کے عملے سے کہا گیا ہے کہ وہ گھروں سے باہر نہ نکلیں۔

اپنی رائے کا اظہار کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *