عِطرناک

مجھے آج وہ بزرگ صورت بابا جی یاد آرہے ہیں جو جامع مسجد میں نمازیوں کو عطّر لگایا کرتے تھے۔یہ تذکرہ ہمارے سابقہ محلّے کا ہے…